You are here
Home > خبریں > پاکستان > خواجہ آصف پر سیاہی پھینکنے والا ملزم اس وقت کہاں اور کس حال میں ہے؟ دنگ کر ڈالنے والی خبر آ گئی

خواجہ آصف پر سیاہی پھینکنے والا ملزم اس وقت کہاں اور کس حال میں ہے؟ دنگ کر ڈالنے والی خبر آ گئی

سیالکوٹ(ویب ڈیسک)ڈپٹی کمشنر ڈاکٹر فرخ نوید نے وزیر خارجہ خواجہ آصف پر سیاہی پھینکے والے شخص کو ایک ماہ جیل کی سزا سنادی۔واضح رہے کہ 10 مارچ کو خواجہ آصف مسلم لیگ (ن) کے اجلاس سے خطاب کررہے تھے کہ ایک شخص نے ان پر کالی سیاہی پھینکی تھی۔ڈپٹی کمشنر نے اپنے

نوٹ میں لکھا کہ مظفر پور کے رہائشی فیاض رسول کو نفرت آمیز جذبات ابھارنے اور نقصِ امن کا ماحول پیدا کرنے پر سزا سنائی گئی۔حکم نامے میں کہا گیا کہ ’فیاض رسول نے اپنی شرانگیزتقریر کے ذریعے مختلف موقعوں پر مذہبی ہم آہنگی اور پرامن ماحول کو نقصان پہنچانے کی کوشش کی جو کہ پبلک آرڈ کی خلاف ورزی ہے تاہم ملزم مزید پرامن ماحول کو بگاڑسکتا ہے‘۔پنجاب مینٹینس آف پبلک آرڈ آرڈیننس 1960 کے سیکشن 3 کے تحت حوالگی کے حکم نامے میں تحریر کیا گیا کہ ’قانون کی بالادستی ، مذہبی ہم آہنگی اور امن و امان کو نقصان پہنچانے کو روکنا ضروری ہے‘۔62 کنال اراضی وگزار۔متعلقہ افسرا نے سمبریال میں لینڈ مافیا سے 62 کنال زمین واگزار کرالی ہے۔اسسٹنٹ کمشنر توقیر نے الیاس چیمہ نے بتایا کہ گزشتہ بعض عناصر نے 25 کروڑ مالیت کی 62 کنال زمین پر قبضہ کرلیا تھا جسے متعلقہ حکام نے لینڈ مافیا کے خلاف کریک ڈاؤن کرتے ہوئے زمین کا قبضہ حاصل کرلیا۔یاد رہے اس سےپہلے گجرات میں تحریک انصاف کے جلسے میں دوران خطاب عمران خان پر جوتا اچھال دیا گیا لیکن وہ علیم خان کو جا لگا۔گجرات میں تحریک انصاف کی ممبر سازی مہم کے دوران عمران خان جلسے سے خطاب کررہے تھے

کہ اس دوران ایک شخص نے اسٹیج پر جوتا اچھال دیا لیکن خوش قسمتی سے وہ چیرمین پی ٹی آئی کو نہ لگا بلکہ ان کے ساتھ کھڑے علیم خان کو جا لگا، واقعے کے فوراً بعد عمران خان خطاب چھوڑ کر واپس روانہ ہوگئے۔واضح رہے سیاست دانوں پر جوتا اچھالنے کے واقعات میں دن بدن تیزی آتی جارہی ہے اور اب تک اس کی زد میں متعدد رہنما آچکے ہیں چند ہفتے قبل ایک تقریب کے دوران وزیرداخلہ احسن اقبال پر بھی جوتا اچھالا گیا جب کہ چند روز قبل وزیرخارجہ خواجہ آصف پر سیاہی پھینکی گئی جس کے بعد مسلم لیگ (ن) کے تاحیات قائد نوازشریف پر بھی جوتا اچھالا گیا جو ان کے سینے پر لگا تھا۔ایک اور خبر کے مطابقسابق وزیراعظم نواز شریف پر جوتے پھینکنے کے تینوں ملزمان کو 14 روزہ ریمانڈ پر جیل بھجوادیا گیا ہے۔نجی نیوز کے مطابق لاہور کی کینٹ کچہری میں جوڈیشل مجسٹریٹ زرتاشہ بگٹی کی عدالت میں سابق وزیراعظم نواز شریف پر جوتا پھینکنے کے خلاف کیس کی سماعت ہوئی۔ تھانہ قلعہ گجر سنگھ پولیس نے تینوں ملزمان عبدالغفور، منور حسین اور محمد ساجد کو عدالت میں پیش کیا۔ ملزم کی پیشی کے وقت کچہری میں سیکیورٹی کے سخت انتظامات کئے گئے تھے۔سماعت کے دوران پولیس نے ملزمان کو جوڈیشل ریمانڈ پر جیل بھجوانے کی استدعا کردی، جسے عدالت نے منظور کرتے ہوئے تینوں ملزمان کو 14 روزہ عدالتی ریمانڈ پر جیل بھجوا دیا۔

Leave a Reply

Top