You are here
Home > خبریں > پاکستان > ’’ زعیم قادری اگر کامیاب ہوگئے تو ۔۔۔۔۔‘‘ عمران خان کے کزن حفیظ اللہ نیازی نے ایسی بات کہہ دی کہ شہباز شریف اور حمزہ شہباز سوچ میں پڑ گئے

’’ زعیم قادری اگر کامیاب ہوگئے تو ۔۔۔۔۔‘‘ عمران خان کے کزن حفیظ اللہ نیازی نے ایسی بات کہہ دی کہ شہباز شریف اور حمزہ شہباز سوچ میں پڑ گئے

اسلام آباد (ویب ڈیسک)سینئر تجزیہ کاروں نے کہا ہے کہ زعیم قادری کو این اے 133 کا ٹکٹ ملنا چاہئے تھا وہ اس کے حقدار ہیں، سیاسی قیادت کے بچوں کو باقاعدہ سیاسی عمل سے گزر کر اوپرا ٓنا چاہئے، زعیم قادری نے این اے 133میں حمزہ شہباز کے نامزد امیدوار کو ہرادیا تو

یہ ان کی جیت ہی ہوگی،اعتزازا حسن کا بیان سیاسی ثقافت کی تنزلی کا اظہار ہے، کلثوم نواز کی بیماری کے حوالے سے سوشل میڈیا پر مچایا گیا گند بہت افسوسناک ہے، جاگیرداروں اور سرداروں سے ووٹر کا سوال کرنا پاکستان میں بڑھتے سیاسی شعور کی نشاندہی کرتا ہے، عوام کو سہولیات نہ دینے اور دھمکیاں دینے والے خودساختہ آقاؤں کو سمجھ لینا چاہئے کہ اب وہ وقت نہیں رہا۔ ان خیالات کا اظہار مظہر عباس، امتیاز عالم، حفیظ اللہ نیازی، افتخار احمد، بابر ستار اور شہزاد چوہدری نے نجی نیوز کے پروگرام ”رپورٹ کارڈ“ میں میزبان عائشہ بخش کے سوالات کے جواب دیتے ہوئے کیا۔ میزبان کے پہلے سوال لاہور حمزہ شہباز اور اس کے باپ کی جاگیر نہیں، زعیم قادری کا این اے 133سے آزاد حیثیت میں انتخاب لڑنے کا اعلان، کیا لیگی کارکن حمزہ شہباز کو ہرا سکتا ہے؟ کا جواب دیتے ہوئے افتخار احمد نے کہا کہ زعیم قادری کا این اے 133میں حمزہ شہباز سے نہیں وحید عالم سے مقابلہ ہوگا، زعیم قادری کو این اے 133 کا ٹکٹ ملنا چاہئے تھا وہ اس کے حقدار ہیں، زعیم قادری نے پچھلے پانچ سال میں پارٹی کا بہت اچھی طرح دفاع کیا ہے۔حفیظ اللہ نیازی کا کہنا تھا کہ پاکستان میں سیاسی جماعتیں شخصی ملکیت

کے اصول پر قائم ہیں، زعیم قادری کا معاملہ بھی اس کی ایک بدترین مثال ہے، سیاسی قیادت کے بچوں کو باقاعدہ سیاسی عمل سے گزر کر اوپرا ٓنا چاہئے، زعیم قادری لاہور سے ن لیگ کے ٹکٹ کیلئے حقدار تھے انہیں ٹکٹ نہ دینا تکلیف دہ ہے۔مظہر عباس نے کہا کہ شریف خاندان نے اتنے خودساختہ زخم مارلیے ہیں کہ اب پارٹی میں دراڑوں کو روک نہیں پارہا ہے، زعیم قادری کے ساتھ پارٹی قیادت کا سلوک انہی باتوں کی عکاسی کرتا ہے جو چوہدری نثار کررہے ہیں، لاہور میں جو صورتحال بن رہی ہے اس میں ن لیگ شدید مشکلات کا شکار ہوسکتی ہے، زعیم قادری نے این اے 133میں حمزہ شہباز کے نامزد امیدوار کو ہرادیا تو یہ ان کی جیت ہی ہوگی۔شہزاد چوہدری کا کہنا تھا کہ پاکستان میں پہلی مرتبہ پارٹیوں میں اسٹیٹس کو چیلنج ہورہے ہیں، سیاستدان تبدیل ہوتے نظر آرہے ہیں اب گدی نشین سیاستدانوں کو اپنی سوچ اور سیاست کا انداز بدلنا پڑے گا۔امتیاز عالم نے کہا کہ زعیم قادری ن لیگ میں غیرجمہوری نظام کو چیلنج کررہے ہیں، اسی طرح بنی گالہ کے باہر بیٹھے کارکن بھی پی ٹی آئی میں لابی سسٹم کو چیلنج کررہے ہیں، پارٹی میں ناانصافی کے خلاف بغاوت کرنا کارکنوں کا جمہوری حق ہے۔ دوسرے سوال زبان زدعام ہے کہ ہارلے اسٹریٹ کلینک شریف خاندان کی ملکیت ہے، نواز شریف کو یقین ہے انہیں سزا ہوگی اس لئے تاخیری حربے استعمال کیے جارہے ہیں، اعتزاز احسن کا الزام! پیپلز پارٹی کے سینئر رہنما کے الزامات میں کتنی صداقت ہوسکتی ہے؟ کا جواب دیتے ہوئے حفیظ اللہ نیازی نے کہا کہ اعتزاز احسن پر افسوس ہوتا ہے ان کی پوری زندگی اِدھر اُدھر ٹوئسٹ کرنے میں گزری ہے۔

Leave a Reply

Top